Siyasi Manzar
Top News قومی خبریں

خصوصی جج کی سخت وارننگ کے بعد سادھوی پرگیہ سنگھ ٹھاکر عدالت میں پیش ہوئی

ممبئی 25/ اپریل(پریس ریلیز)مالیگاؤں 2008 بم دھماکہ مقدمہ کی کلید ی ملزمہ اور بھوپال سے رکن پارلیمنٹ (بھارتیہ جنتا پارٹی) سادھوی پرگیہ سنگھ ٹھاکر خصوصی این آئی اے عدالت کی سخت وارننگ کے بعد آج بالآخیرممبئی میں واقع خصوصی این آئی اے عدالت میں حاضر ہوئی اور اس نے اپنا بیان درج کرایا۔سادھوی پرگیہ سنگھ ٹھاکر عدالت میں تقریبا ً ایک بجے پہنچی اور پھر دیڑھ گھنٹے تک عدالت میں موجود رہیں، اس دوران عدالت نے اس سے سی آر پی سی کی دفعہ 313/ کے تحت سوالات پوچھے اوراس کی جانب سے دیئے گئے جوابات کا اندراج کیا۔عدالتی کارروائی کے دوران سادھوی پرگیہ سنگھ ٹھاکر کے وکلاء جے پی مشراء، پرشانت مگوموجود تھے جبکہ بم دھماکہ متاثرین کی جانب سے ایڈوکیٹ شاہد ندیم (جمعیۃ علماء مہاراشٹر ارشد مدنی) اور این آئی اے کی جانب سے خصوصی سرکاری وکی اویناس رسال اور ان کے معاونین موجود تھے۔خصوصی این آئی اے عدالت کے جج نے سادھوی پرگیہ سنگھ ٹھاکر کو کہا کہ انہیں لگاتار کئی دن تک عدالت میں حاضر ہونا پڑے گا کیونکہ ان کا بیان درج کرنے کا وقت درکا ر ہے۔ عدالت نے مزید کہا کہ ان کی غیر حاضری میں عدالت نے دیگر ملزمین کے بیانات کا اندراج کرلیا ہے، صرف تین ہی گواہان کی گواہی باقی ہے جن کی بنیاد پر دیگر ملزمین سے سوالات پوچھے جائیں گے۔ عدالت ابتک 2700/ سوالات کے جوابا ب ملزمین سے پوچھنے کے بعد ان کا اندراج اپنے ریکارڈ میں درج کرچکی ہے۔ملزمہ سادھوی پرگیہ سنگھ کی مسلسل عدالت سے غیر حاضری کے بعد خصوصی عدالت نے اس کے خلاف قابل ضمانت وارنٹ جاری کیا تھا جس کے بعد سادھوی عدالت میں پیش ہوکرعدالت سے وارنٹ کینسل کیئے جانے کی گذارش کی تھی، عدالت نے وارنٹ کینسل کردیا تھا لیکن اس کے بعد پھر سادھوی عدالت سے غیر حاضر رہی اور اس نے غیر حاضری کی وجہ خرابی صحت بتایا۔ خصوصی عدالت نے ملزمہ کی صحت کی تصدیق کرنے کے لیئے این آئی اے کو حکم جاری کیا تھا اور این آئی اے کو عدالت میں رپورٹ پیش کرنے کو کہا تھا۔ واضح رہے کہ ممبئی کی خصوصی این آئی اے عدالت ملزمین سادھوی پرگیہ سنگھ ٹھاکر، میجررمیش اپادھیائے، سمیر کلکرنی، اجئے راہیکر، کرنل پرساد پروہت، سدھاکر دھر دویدی اور سدھاکر چترویدی کے خلاف قائم مقدمہ کی سماعت روز بہ روز کی بنیاد پر جاری ہے۔323سرکاری گواہان کے بیانات کے اندراج کے بعد عدالت نے ملزمین کے 313 کے بیانات کا اندراج شروع کردیا ہے۔

Related posts

بلقیس کے مجرمین کی سزا بحال ہونے سے عدلیہ کا بلند ہوا وقار:ڈاکٹر ایوب

Siyasi Manzar

دینی شعورکے ساتھ سیاسی بصیرت بھی مسلمانوں کےلئے لازمی:ابوعاصم اعظمی :Abu Asim Azmi

Siyasi Manzar

ملک کے بڑے اسپتالوں کی طرح ہمارے اسپتال میں سہولیتیں مہیا ہوں گی:ڈاکٹر ایوب

Siyasi Manzar