Siyasi Manzar
راجدھانی

UNICEF, for every child : عالمی یوم اطفال 2023 بچوں اور نوجوانوں میں مساوات کے لئے نئی اختراعات میں تبدیلی کی کو فروغ دے رہا ہے

 نوجوانوں نے سماجی بھلائی کے لئے جدید حل کی نمائش کی ، بچوں کے حقوق اور مساوات کی حمایت میں ہندوستان بھر کی مشہور عمارتیں نیلے رنگ میں روشن کی گئیں 
 نئی دہلی، 21 نومبر 2023: یونیسیف نے اندرا گاندھی نیشنل سینٹر فار آرٹس کے ساتھ مل کر ایک نمائش کا اہتمام کیا جیسے "انوویٹ فار ایکویلٹی” کا نام دیا گیا ۔ اس موقع پر ہندوستان بھر سے منخب کئے گئے چودہ نوجوان اختراع کار اکٹھے ہوئے ۔ انہوں نے اپنے انوویٹو خوش سلیقہ کام کی نمائش کی ۔
 اس نمائش کا افتتاح وزیر مملکت برائے خارجہ امور اور ثقافت میناکشی لیکھی نے کیا ۔ انہوں نے مساوی مواقع اور بااختیار بنانے پر توجہ مرکوز کرنے والے پینل مباحثے میں بات کرتے ہوئے کہا کہ جدت طرازی کو فروغ دینا بچوں کے لئے اعلی پیداواری صلاحیت اور معاشی نمو کی بنیاد ہے، لیکن ساتھ ہی یہ لڑکیوں اور لڑکوں کی ترقی کے لئے بھی اہم ہے ۔ حکومت ہند کی دور اندیشی اور بصیرت والے اقدامات نے نوجوانوں میں اختراع کی ثقافت کو فروغ دیا ہے، جس کی ایک بڑی مثال اٹل انوویشن مشن اور اسٹارٹ اپ ہے ۔
 باصلاحیت نوجوان اختراع کاروں کے ذریعہ پیش کی گئی مختلف اختراعات کے درمیان رخ اس خیال پر مرکوز تھا کہ الگ الگ کامگاروں جیسے کسانوں، کارخانہ مزدوروں، معذوروں، بزرگوں اور تعمیرات میں کام کرنے والے کارکنوں کو درپیش رکاوٹوں کو دور کر کے ان کی محنت کو کم کیا جائے ۔ ان کی پیداواری صلاحیت کو بڑھانا اور زندگی کے معیار کو بہتر بنانا تھا ۔
ان تحقیقات کی قابل ذکر جھلکیوں میں مواصلات کے لئے اسمارٹ دستانے، پیرا ایتھلیٹس کے لئے ہوپ آرم، نابینا لوگوں کے لئے جوتے اسٹیپ اینڈ اے ایم پی، خود کار طریقہ سے بیج کی تقسیم کے لئے بوائی شوز اور ایک ریئل ٹائم سائن زبان کا مترجم شامل تھے ۔
 یونیسیف انڈیا کی نمائندہ محترمہ سنتھیا میک کیفری نے پینل ڈسکشن کا آغاز بچوں کے عالمی دن کی اہمیت اور اختراعات کو فروغ دینے کی اہمیت پر زور دیتے ہوئے کیا ۔ انہوں نے لڑکیوں اور لڑکوں کو یکساں مواقع دینے اور نئی تحقیقات کے احساس کو پیدا کرنے لئے حوصکہ افزائی کرنے پر زور دیا ۔
 انہوں نے کہا کہ "لڑکیوں اور لڑکوں کو، جب سوچنے، سیکھنے، تجربہ کرنے اور اختراع کرنے کے لئے مساوی موقع دیا جاتا ہے، تو وہ ان سے جڑے مسائل کے حساس حل اور مواقع پر کام کرتے ہیں ۔ انہوں نے آگے کہا آگے کہا کہ گلوبل انوویشن انڈیکس میں بھارت کا 81 ویں مقام سے 40 پر آنا اس بات کا ٹھوس ثبوت ہے کہ بھارت میں اختراعی صلاحیت کافی زیادہ ہے ۔ آج ہم ایسے ہی کچھ نوجونوں سے ملے ۔
مس سنتھیا نے کہا کہ یونیسیف بچوں میں ان کی تخلیقی صلاحیتوں اور خیالات کو بروئے کار لانے کے لئے ان کے ساتھ کام کرنے اور انہیں نواقع دینے میں یقین رکھتا ہے ۔
تاکہ ان کی مساوی اور بااختیار رسائی کی حمایت کے لئے تمام بچوں اور نوجوانوں کو ہر جگہ مواقع ملیں ۔ عدم مساوات کو دور کرنے کے لئے نوجوان آوازوں کو بلند کرنا ہے ۔
 پینل مباحثہ کے مقررین میں اندرا گاندھی نیشنل سینٹر فار آرٹس کے ڈین پروفیسر پی جھا، اٹل ٹنکرنگ لیب کی پروگرام ڈئریکٹر محترمہ دیپالی اپادھیائے،
 ڈائریکٹر، مسٹر  دیا شنکر، نیشنل ہندی ڈیجیٹل نیوز 18 کے ایڈیٹر، نوجوان
 اختراع کار اور محترمہ سنتھیا میک کیفری، یونیسیف انڈیا کی نمائندہ شامل تھے ۔
وکرم سارا بھائی چلڈرن انوویشن سینٹر گجرات یونیورسٹی، بھارت میں بچوں اور نوجوانوں کے لئے اپن نوعیت کا پہلا مرکز ہے ۔ سینٹر کے 15 سالہ نوجوان اختراع کار  نکھل لیموس نے اپنی اختراع کے بارے میں بات کرتے ہوئے کہا، ادویات اور صحت کی دیکھ بھال کا معمول کے ساتھ کسی ٹریک پر رہنے کا میڈیٹل ایک نیا حل ہے ۔
” نکھل نے کہا، "میں آج عالمی یوم اطفال پر اپنی اختراع ظاہر کرتے ہوئے خوش ہوں ۔ ہمارے لئے عالمی بچوں کا دن ۔ میں نے اس گیجٹ کو ان لوگوں کی مدد کے لئے بنایا ہے جو کبھی دوائی لینا نہ بھولیں جو انہیں لینے کی ضرورت ہے ۔ میڈیٹل میں ایک بوتل اور ایک گولی ہولڈر ان بلٹ ہے ۔ ایک الارم سسٹم ہے جسے آپ دن میں چھ بار تک سیٹ کر سکتے ہیں ۔ آپ کبھی بھی دوائیں لینے سے محروم نہیں ہوں گے ۔ آج میں نے ملک بھر سے آئے دوسرے نوجوان اختراع کاروں اور صنعت کاروں سے ملاقات کی اور ان کے بارے میں جانا ۔ مجھے امید ہے کہ اس کا ہمارے معاشرے کے نوجوانوں پر اثر ہوگا خاص طور پر لڑکیوں اور لڑکوں میں اختراع کرنے کی ایک لہر پیدا ہوگی ۔
 پروفیسر پی جھا، ڈین، اندرا گاندھی نیشنل سینٹر فار دی آرٹس نے کہا، "فن اور تخلیقی اظہار انسانی ثقافت کا ایک لازمی حصہ ہے، انسان ہونے کا مطلب سوچنا، دریافت کرنا اور اختراع کرنا ہے ۔ اختراع تخلیقی صلاحیتوں کے بارے میں ہے اور ثقافت تخلیقی صلاحیتوں کو فروغ دیتی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ اندرا گاندھی نیشنل فار دی آرٹس اور یونیسیف کا اشتراک اسی سمت میں ایک قدم ہے ۔

Related posts

Haj-2024:دہلی ہندوستانی سے عازمین حج کی پہلی فلائٹ مدینہ منورہ روانہ 

Siyasi Manzar

شعبۂ تعلیمی مطالعات میں منعقد جشنِ اردو پروگرام میں امتیاز احمد کی ترجمہ شدہ کتاب ’’ارتقائے خودی اور تعلیم‘‘ کی رسمِ رونمائی

Siyasi Manzar

اولاد رب کی طرف سے انمول نعمت ہے اس کی صحیح تربیت کرنی والدین کی ذمہ داری ہے:مولانا وسیم احمد مدنی

Siyasi Manzar

Leave a Comment