Siyasi Manzar
Top News قومی خبریں

امروہہ میں ایک ساتھ گرجے راہل ،اکھلیش

انڈیا اتحاد کی ریلی میں کانگریس کے سابق صدر نے کہا اگر امیر کے قرض معاف ہوں گے توغریب کے بھی ہوں گے،اکھلیش بولے دنیا میں کوئی طاقت نہیں جو آئین کو بد ل سکے

سالار غازی
امروہہ 20 اپریل ( ایس ایم نیوز ) یوپی کے امروہہ میں ا آج منوقدہ ریلی سے خطاب کرتے ہوئے کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی نے کہا کہ اگر ملک کے امیر ارب پتیوں کے قرضے معاف کیے جائیں گے تو غریبوں کے قرضے بھی معاف ہوں گے۔ ہم جو کرنے جا رہے ہیں وہ دنیا کی کسی حکومت نے نہیں سوچا ہوگا۔ مہالکشمی یوجنا کے تحت ملک کے غریب خاندانوں کی فہرست تیار کی جائے گی، کانگریس پارٹی ہر سال ہر خاندان کی ایک خاتون کے بینک اکاؤنٹ میں ایک لاکھ روپے جمع کرے گی۔اس ریلی کی ایک اہم خصوصیت یہ تھی کہ پہلی بار راہل گاندھی اور اکھلیش یادو امروہہ میں ایک ساتھ ریلی کرتے نظر آئے۔اتر پردیش کے سابق وزیر اعلی اور سماج وادی پارٹی کے رہنما اکھلیش یادو اور کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی کو امروہہ میں ایک اسٹیج پر دیکھا گیا۔ دونوں لیڈروں نے اپنی اپنی تقریروں میں بی جے پی پر شدید حملہ کیا۔ پہلے مرحلے کی ووٹنگ کے بارے میں اکھلیش یادو نے کہا کہ یہ پہلے دن بی جے پی کا فلاپ شو رہا ہے۔ ساتھ ہی راہل گاندھی نے کہا کہ ہماری لڑائی نظریات کی لڑائی ہے۔ ایک طرف ہندوستان اتحاد ہے اور دوسری طرف بی جے پی اور آر ایس ایس ہے۔سب سے پہلے ریلی سے خطاب کرتے ہوئے اکھلیش یادو نے کہا کہ بی جے پی نے انتخابات کے پہلے مرحلے میں فلاپ شو دکھایا ہے۔ اس کی جھوٹی کہانی کوئی نہیں سننا چاہتا۔ اس کے کلچڈ ڈائیلاگ عوام میں مقبول نہیں ہیں۔ جب یوپی کے لوگ ہمارا استقبال کرتے ہیں تو وہ بہت اچھے طریقے سے کرتے ہیں، لیکن جب وہ الوداع کرتے ہیں تو وہ ڈھول اور ڈھول کے ساتھ کرتے ہیں۔’جب ہم حکومت میں تھے تو کسانوں کے قرضے معاف کیے تھے‘ساتھ ہی راہل گاندھی نے کہا کہ بی جے پی کے لوگ کہہ رہے ہیں کہ وہ آئین بدلیں گے، میں کہنا چاہتا ہوں کہ دنیا میں کوئی طاقت نہیں جو ہندوستان کے آئین کو بدل سکے۔ پی ایم مودی نے ملک کے ارب پتیوں کے 16 لاکھ کروڑ روپے معاف کر دیے ہیں، ہم نے کسانوں کے قرضے معاف کیے تھے۔ 16 لاکھ کروڑ اتنی رقم ہے جس سے ہم 25 بار کسانوں کے قرض معاف کر سکتے ہیں۔
ملک کے کچھ ارب پتی چینی اشیاء ہندوستان میں فروخت کرتے ہیں۔مہالکشمی اسکیم کا بھی ذکر کیا۔کانگریس کے سابق صدر نے کہا کہ ہندوستان اتحاد ملک کے غریبوں کو اتنا ہی پیسہ دینے والا ہے جتنا مودی جی نے ملک کے کچھ ارب پتیوں کو دیا ہے۔ ہم جو کرنے جا رہے ہیں وہ دنیا کی کسی حکومت نے نہیں سوچا ہوگا۔ ملک کے امیروں ارب پتیوں کے قرضے معاف ہوں گے تو ان غریبوں کے قرضے بھی معاف ہو جائیں گے۔ اگر ہماری حکومت آئی تو ہم مہالکشمی یوجنا کے تحت ملک کے غریب خاندانوں کی فہرست بنائیں گے اور کانگریس پارٹی ہر خاندان کی ایک خاتون کے بینک میں ہر سال ایک لاکھ روپے جمع کرائے گی۔راہل نے کہا – اگنیور اسکیم کو پھاڑ کر پھینک دے گا۔ملازمتوں کا تذکرہ کرتے ہوئے راہل گاندھی نے کہا کہ اس وقت ملک میں 30 سال سے سرکاری نوکریاں خالی ہیں۔ جب حکومت آئے گی تو اس کے لیے بھرتیاں شروع کریں گے۔ اگنیور اس منصوبے کو پھاڑ کر پھینک دے گا۔ پے پال کو لیک کرنے والوں کو سخت ترین سزا دی جائے گی۔ پہلی ملازمت کی گارنٹی اسکیم کے تحت ملک کے تمام گریجویٹس کو اپرنٹس شپ کا حق دیا جائے گا۔

Related posts

Saudi Arabia Gaza and Palestine: اہل غزہ و فلسطین کے لیے سعودی عرب کی فراخ دلانہ امداد قابل ستائش:عبدالحکیم مدنی

Siyasi Manzar

امین پٹھان نے بی جے پی کو دیا بڑا جھٹکا، کانگریس میں ہوئے شامل Rajasthan Election 2023

Siyasi Manzar

ریاست میں آلودہ ماحول کی ذمہ دار’کھوکے‘ حکومت ہے:سپریا تائی سولے

Siyasi Manzar