Siyasi Manzar
کھیل

پاکستان نے نیوزی لینڈ کوڈک ورتھ لوئس اصول کے مطابق 21 رنز سے شکست دی، سیمی فائنل کی امیدیں زندہ

بنگلورو، 04نومبر(ایس ایم نیوز)نیوزی لینڈ کا بڑا اسکور فخر زمان کی طوفانی اننگز کے سامنے بونا نظر آیا۔ تاہم بارش نے پاکستان کی مشکلات بھی کم کر دیں۔ اس طرح پاکستان نے 2023 کے عالمی کپ کے 35ویں میچ میں نیوزی لینڈ کو 21 رنز سے شکست دے دی۔ ٹاس ہارنے کے بعد پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے نیوزی لینڈ نے مقررہ 50 اوورز میں 6 وکٹوں پر 401 رنز بنائے۔ اس کے بعد ہدف کا تعاقب کرتے ہوئے پاکستان کی اننگز میں دو بار بارش نے مداخلت کی۔دراصل، ڈک ورتھ لوئس اصول کے مطابق پاکستان کو 25.3اوورز میں ایک وکٹ کے نقصان پر 179 رنز بنانے تھے، لیکن اس کا سکور 200 رنز تھا۔ جس کی وجہ سے پاکستان 21 رنز سے جیت گیا۔ آپ کو بتاتے چلیں کہ ڈک ورتھ لوئس کا طریقہ ہر گیند پر بدلتا رہتا ہے اور وکٹ کے حساب سے کام کرتا ہے۔402 رنز کے ہدف کے تعاقب میں پاکستان کی پہلی وکٹ دوسرے ہی اوور میں عبداللہ شفیق کی صورت میں گری جو 4 رنز بنانے کے بعد پویلین لوٹ گئے۔ اس کے بعد دوسرے اوپنرز فخر زمان اور بابر اعظم نے مل کر ایسی اننگز کھیلنا شروع کی جس کا جواب کسی کیوی گیند باز کے پاس نہیں تھا۔ جہاں ایک طرف فخر جارحانہ اننگز کھیل رہے تھے وہیں بابر اعظم ان کی خوب اینکرنگ کر رہے تھے۔تیز رفتار رن ریٹ سے آگے بڑھنے والا پاکستان پہلے 22ویں اوور میں بارش سے پریشان ہو گیا۔ پھر کچھ دیر بعد کھیل شروع ہوا اور پاکستان کو 41 اوورز میں 342 رنز کا ہدف دیا گیا۔ یعنی پاکستان ٹیم کو اگلے 19.3اوورز میں 182 رنز بنانے تھے۔ ہدف کے تعاقب میں پاکستان کی اننگز کچھ دیر ہی چل سکی اور 26ویں اوور میں بارش نے ایک بار پھر دستک دی۔اس دوران پاکستانی ٹیم نے 25.3اوورز میں صرف 1 وکٹ کے نقصان پر 200 رنز بنائے۔ ٹیم کے اوپنر فخر زمان نے 155.56کے زبردست اسٹرائیک ریٹ سے بیٹنگ کرتے ہوئے اسکور کو 126 رنز تک پہنچایا تھا۔ اس دوران فخر نے 8 چوکے اور 11 لمبے اور نظر آنے والے چھکے لگائے۔ جبکہ کپتان بابر نے اپنی اننگز کو آگے بڑھاتے ہوئے 63 گیندوں پر 66 رنز تک پہنچایا جس میں 6 چوکے اور 2 چھکے شامل تھے۔فخر زمان کے طوفان اور آسمان پر ہونے والی بارش نے نیوزی لینڈ کے بلے بازوں کی شاندار اننگز کو مکمل طور پر تباہ کر دیا۔ ٹیم کے لیے نوجوان آل راؤنڈر رویچ رویندرا نے 94 گیندوں میں 15 چوکوں اور 1 چھکے کی مدد سے 108 رنز بنا کر ٹورنامنٹ میں اپنی تیسری سنچری اسکور کی۔ اس کے علاوہ کپتان کین ولیمسن نے 10 چوکوں اور 2 چھکوں کی مدد سے 95 رنز بنائے۔پاکستان کی جانب سے شاہین آفریدی نے 0/90، حارث رؤف نے 1/85 اور حسن علی نے 10 اوورز میں 1/82 وکٹ حاصل کیں۔ تاہم اس دوران وسیم جونیئر نے عمدہ بولنگ کرتے ہوئے 10 اوورز میں 60 رنز دیے اور 3 وکٹیں حاصل کیں۔نیوزی لینڈ کی جانب سے 25.3اوورز میں ٹرینٹ بولٹ نے 6 اوورز میں 50، ایش سودھی نے 4 اوورز میں 44، گلین فلپس نے 5 اوورز میں 42 اور سینٹنر نے 5 اوورز میں 35 رنز بنائے۔ تاہم، اس دوران، ٹم ساؤتھی اقتصادی رہے اور 5 اوورز میں صرف 27 رنز دے کر 1 وکٹ حاصل کی۔

Related posts

Australia vs Pakistan 1st Test: پرتھ ٹیسٹ میں آسٹریلیا نے پاکستان کو 360 رنز سے روندا، تین میچوں کی سیریز میں بنائی سبقت

Siyasi Manzar

IND vs SA:ارشدیپ سنگھ اور آویش خان نے مل کر افریقہ کی پوری ٹیم کو 116 رنز پر ہی کیا ڈھیر

Siyasi Manzar

کوہلی نے اپنے یومِ پیدائش پر کیا کمال، ماسٹر بلاسٹر سچن تندولکرکی سب سے زیادہ وَنڈے سنچری کی برابری

Siyasi Manzar

Leave a Comment