Siyasi Manzar
راجدھانی

Jamal Siddiqui:تصوف ایک روشنی کی مانند ہے، جو تشدد سے خوف زدہ دنیا کو روشنی دکھا سکتا ہے: جمال صدیقی

ملک کی سب سے بڑی درگاہ بی جے پی اقلیتی مورچہ کی "صوفی سمواد” میگا مہم کا حصہ بن گئی

بی جے پی اقلیتی مورچہ درگاہوں کے مسائل کی آواز حکومت تک پہنچانے کے لیے کام کر رہا ہے: جمال صدیقی

درگاہ شاہ ولایت حضرت خواجہ شمس الدین ترک پانی پتی کے سجادہ نشین خواجہ سید معراج حسین صابری ہریانہ، پنجاب، چندی گڑھ میں صوفی سمواد مہا مہم کے انچارج بن گئے

دہلی05 دسمبر(پریس ریلیز) بی جے پی اقلیتی مورچہ کے قومی صدر جمال صدیقی نے دہلی میں بی جے پی کے مرکزی دفتر میں پانی پت، ہریانہ میں واقع درگاہ شاہ ولایت حضرت خواجہ شمس الدین ترک پانی پتی کے سجادہ نشین خواجہ سید معراج حسین صابری کو خراج عقیدت پیش کیا۔ ملک کی سب سے بڑی درگاہیں، مورچہ کے ذریعے ملک بھر میں صوفی نظریات کو پھیلایا جا رہا ہے، ہندوستان کے لوگوں کو وزیر اعظم سے جوڑنے کے لیے چلائی جا رہی "صوفی سمواد” میگا مہم کا ہریانہ، پنجاب اور چندی گڑھ کا انچارج مقرر کیا گیا ہے۔

نریندر مودی اس موقع پر قومی صدر جمال صدیقی نے میڈیا کو بتایا کہ وزیر اعظم نریندر مودی کی کال پر ہم ملک بھر میں ’’صوفی سمواد‘‘ میگا مہم چلا رہے ہیں اور ہمیں خوشی ہے کہ صوفی برادری اس مہم کا کھلے دل سے خیر مقدم کر رہی ہے۔ ایسا ہوتا تھا.اقلیتی مورچہ کی اس عظیم مہم کے ذریعے ہم درگاہوں کے مسائل کی آواز حکومت تک پہنچا رہے ہیں۔ ہم سب کو مل کر ہندوستان کو مضبوط کرنا ہے۔ انہوں نے کہا کہ بی جے پی سب کو ایک پلیٹ فارم پر لے جاتی ہے۔ آج تک کسی حکومت نے صوفیوں کی فکر نہیں کی۔ صوفیاء کو ایک پلیٹ فارم پر لانا اور ان کی حفاظت کرنا بی جے پی کا عزم ہے۔ وزیر اعظم نریندر مودی کو ہمیشہ صوفی نظریات سے خاص لگاؤ ​​رہا ہے۔ وزیر اعظم کا خیال ہے کہ تصوف ایک روشنی کی مانند ہے، جو تشدد سے خوفزدہ دنیا کو روشنی دکھا سکتا ہے۔ اسلام امن کا مذہب ہے اور تصوف اس کی روح ہے۔ آنے والے دنوں میں لوک سبھا انتخابات تک پارٹی کا اقلیتی محاذ ملک کی تمام درگاہوں اور خانقاہوں کا دورہ کرے گا اور رابطہ قائم کرے گا۔ صوفی سمواد کے قومی انچارج ڈاکٹر اسلم نے کہا کہ صوفی سمواد ابھیان کی ٹیم ملک کی 22 ریاستوں میں کامیابی سے کام کر رہی ہے۔*

اس دوران صوفی سمواد مہا ابھیان کے نیشنل کوآرڈی نیٹر ڈاکٹر اسلم، حضرت مولانا مفتی انتظار حسین قادری، قاری سلیم صابری، کمال بابر موجود تھے۔

Related posts

دہلی پولیس نے ہفتے کے دوران مریضوں کا مفت علاج کیا

Siyasi Manzar

دہلی یونیورسٹی نے کیا ونٹر وکیشن کا اعلان Delhi University announced winter vacation

Siyasi Manzar

Jamal Siddiqui:صوفیاء کی حفاظت کرنا بی جے پی کا عزم:- جمال صدیقی

Siyasi Manzar

Leave a Comment